نکھرا نکھرا چہرہ۔۔۔

ملازمت پیشہ و گھریلو خواتین ہوں یا لڑکیاں، سب ہی خوب صورتی کے معاملے میں بے حد حساس ہوتی ہیں۔ ان کے چہرے پر ایک چھوٹا سا دانہ بھی نکل آئے تو پریشان ہو جاتی ہیں اور طرح طرح کی کریمیں اور لوشن استعمال کرنے لگتی ہیں۔ کریموں کے استعمال سے چہرے کی جلد خراب بھی ہوسکتی ہے اور چہرہ بدنما بھی ہوسکتا ہے۔ اس لیے ان کے استعمال کے سلسلے میں احتیاط سے کام لینا چاہیے۔ بہتر یہ ہے کہ چہرے کے داغ دھبوں اور جھائیوں وغیرہ سے چھٹکارا پانے کے لیے دیسی نسخے اور گھریلو ٹوٹکے استعمال کیے جائیں۔ کیوں کہ ان کے سائیڈ افیکٹس نہیں ہوتے ۔ ذیل کی سطور میں چہرے اور جلد کی خوب صورتی کے لیے کچھ ایسے ہی ٹوٹکے دیے جا رہے ہیں، جن میں استعمال ہونے والی اشیاء آپ کو اپنے باورچی خانے ہی سے دستیاب ہوسکتی ہیں:

دانوں کے نشانات

چہرے پہ دانے نکلنے کے بعداکثر سرخ رنگ کے نشانات چھوڑ جاتے ہیں۔ بعد میں ان نشانات کی جگہ گڑھے پڑ جاتے ہیں جو بدنما لگتے ہیں۔ اس مسئلے کے حل کے لیے چند قطرے لیموں کا رس اور انڈے کی سفیدی لے کر خوب اچھی طرح پھینٹ لیں۔ اس محلول کو چہرے پہ لگائیں اور خشک ہونے تک لگا رہنے دیں پھر چہرے کو ٹھنڈے پانی سے دھولیں۔ یہ عمل روزانہ کریں۔ چند ہی روز میں نشانات مندمل ہوناشروع ہوجائیں گے۔ اس کے علاوہ کھیرا، گلاب کا عرق اور لیموں کا رس بھی اس طرح کے نشانات کے لیے مفید ہے۔ ایک کھیرا چھیل کر پیس لیں پھر اس میں ایک چمچہ گلاب کا عرق اور چند قطرے لیموں کا رس شامل کرلیں۔ اس میں صاف سوتی یا ململ کا کپڑا بھگو کر چہرے پر لگائیں اور بعد میں ٹھنڈے پانی سے منہ دھولیں۔

روشن چہرہ

چہرے کی جلد روشن اور چمک دار بنانے کے لیے ایک عدد ٹماٹر کے جو سمیں دو چمچے بیسن اور ایک چوتھائی چمچہ پسی ہوئی ہلدی اچھی طرح ملالیں۔ اسے چہرے پر لگائیں اور پندرہ بیس منٹ کے لیے چھوڑ دیں۔ پھر ٹھنڈے پانی سے منہ دھولیں۔ چہرہ صاف ہوجائے گا۔ اس کے علاوہ بادام کے تیل میں دو کیپسول وٹامن ای کے شامل کریں۔ اس مکسچر کو بنانے کے لیے فریج میں رکھ لیں اور جب بھی چہرے پر لگائیں اس میں تھوڑا سا ایلوویرا جیل شامل کرلیں۔ آپ کا پیسٹ جیل کی طرح کا بن جائے گا۔ اس جیل سے چہرے کو اتنا مساج کریں کہ جیل چہرے میں جذب ہوجائے۔ یہ کام تقریبا پانچ منٹ میں مکمل ہو جاتا ہے۔ اس کے بعد بھی پانچ منٹ تک چہرے کو نہ دھوئیں۔ پانچ منٹ بعد چہرے کو نیم گرم پانی سے دھوئیں۔ ایک پیالے میں ایک لیموں کا رس تھوڑے سے پانی کے ساتھ مکس کریں اور چہرہ دھونے کے بعد اس مکسچر کو روئی کی مدد سے چہرے پہ لگائیں اور دو منٹ کے بعد ٹھنڈے پانی سے منہ صاف کرلیں۔

خشک اور روکھی جلد

بعض خواتین کو شکایت ہوتی ہے کہ ان کے چہرے کا رنگ تو صاف ہے لیکن ان کے چہرے پہ روکھا پن بہت زیادہ ہے۔ جلد بالکل مرجھائی ہوئی ہے۔ خشک جلد کے لیے تین چمچے شہد، ایک چمچہ گلیسرین، ایک چمچہ گلاب کا عرق اور ایک چھوٹا چمچہ پسی ہوئی ہلدی کا مکسچر بنالیں اور اسے بیس سے پچیس منٹ کے لیے چہرے پہ لگائیں۔ اس کے بعد ٹھنڈے پانی سے چہرہ دھولیں۔ یہ نسخہ روزانہ استعمال کریں۔

نکھری نکھری جلد

چاول کا آٹا، کوکونٹ ملک اور ٹماٹر کا پیسٹ، تینوں چیزوں کو برابر دو دو چمچے لے کر ایک گاڑھا پیسٹ بنالیں۔ اس ماسک کو پندرہ منٹ کے لیے چہرے پہ لگا رہنے دیں۔ ہلکے ہاتھوں سے چہرے پہ مساج کر کے اس ماسک کو اتار لیں اور چہرہ دھو کر اچھا سا موائسچرائزر لگائیں۔ یہ ماسک ہر قسم کی جلد کے لیے موافق ہے۔

ایکنی یادانے دور کرنے کے لیے

ایک عدد لیموں کے رس کو جہاں جہاں ایکنی کے نشانات موجود ہیں، روئی کی مدد سے لگائیں۔ بیس منٹ چہرے پہ لگا ہرنے کے بعد نیم گرم پانی سے چہرہ دھولیں۔ ایکنی سے چھٹکارا مل جائے گا۔ اس کے علاوہ رات کو سونے سے پہلے چہرے کو ملتانی مٹی سے کلینزنگ کریں اور نیم گرم یا ٹھنڈے پانی سے منہ دھولیں۔

چہرے کے بال صاف کرنے کے لیے

دو چمچے شہد، دو چمچے لیموں کا رس اور ایک چمچہ جو کا آٹا لیں۔ جو کے آٹے میں باقی اجزا شامل کریں پھریہ آمیزہ چہرے کے ان مقامات پر لگائیں جہاں سے آپ کو بال صاف کرنے ہیں۔ مکسچر کو تقریبا پندرہ منٹ چہرے پہ لگا کے چھوڑ دیں اور پھر نیم گرم پانی سے چہرہ دھولیں۔ اس کے بعد چہرے پہ اچھی سی فیس کریم لگالیں۔ یہ عمل ہفتے میں دو سے تین بار کریں۔ چہرے کے بال ہمیشہ کے لیے صاف ہوجائیں گے۔lll

شیئر کیجیے
Default image
سحرش پرویز

Leave a Reply