آمد رمضان

مومنو خوشیاں مناؤ آمد رمضان ہے

پھر ملا ماہِ مبارک، رب کا یہ احسان ہے

کھل گیا اک بار پھر سے خیر کا، رحمت کا در

سخت زنجیروں میں جکڑا آج پھر شیطان ہے

مومنوں کے چہرے دیکھو چاند سے روشن ہیں آج

ذکر ہے سب کی زباں پر ہاتھ میں قرآن ہے

مسجدیں معمور ہیں ذکر و تلاوت، وعظ سے

جوش ایماں دیکھ کر شیطان بھی حیران ہے

کس قدر پر نور ہے منظر، کہ ہے وقت سحر

او رپھر افطار میں کیا نعمتوں کا خوان ہے

کس قدر ہے روح پرور پھر تراویح کا سماں

رب کے ہیں الفاظ اور قاری بھی خوش الحان ہے

بن گیا ہے ڈھال روزہ ہر بدی کے وار سے

صبر اور برداشت مومن کی نمایاں شان ہے

اے خدا توفیق دے اختر بھی کچھ حاصل کرے

بارشِ رحمت میں بھی محروم یہ نادان ہے

شیئر کیجیے
Default image
اختر سلطان اصلاحی

Leave a Reply