4

ہنسنا منع ہے

استاد: اگر تمہاری ایک جیب میں ایک ہزار روپے ہوں اور دوسری میں دو ہزار روپے تو تم کیا خیال کروگے؟

شاگرد: یہی کہ آج اپنے ابا جان کی قمیص پہن آیا ہوں۔

٭٭

استاد: دنیا میں شرح اموات کیا ہے؟

شاگرد: جناب سو فیصد۔

استاد(جھلا کر): وہ کیسے؟

شاگرد: جناب جو پیدا ہوتا ہے، وہ ایک دن ضرور مرتا ہے۔

٭٭

پولیس نے ایک شخص کو تالاب میں نہاتے دیکھا تو اس سے کہا: ’’باہر آؤ اور کپڑے پہنو! ہمیں تمہارے کپڑوں کی تلاشی لینی ہے۔‘‘

٭٭

بیٹا: ماں! میں اب اسکول نہیں جاؤں گا، کوئی کام کرو ںگا۔

ماں: بیٹا! ابھی تم نے صرف چار جماعتیں پڑھی ہیں، بھلا تم کیا کام کرسکوگے!

بیٹا: تیسری جماعت کے بچوں کو ٹیوشن پڑھاؤں گا۔

٭٭

ڈاکٹر: فرمائیے آپ کو کیا بیماری ہے؟

مریض: مجھے کھانا کھانے کے بعد بھوک نہیں لگتی۔

٭٭

خالد نے آہ بھر کر کہا: مجھ سے زیادہ بدقسمت اور کون ہوگا کہ میری بیوی بہترین کھانا پکانا جانتی ہے مگر پکاتی نہیں۔

’’یہ مت کہو۔‘‘ یونس نے کہا :’’دنیا میں تم سے بھی بڑے بدقسمت لوگ موجود ہیں۔ میری بیوی کی مثال لے لو، وہ کھانا پکانا نہیں جانتی مگر پھر بھی پکاتی ہے۔‘‘

٭٭

تین دوست گپیں لگا رہے تھے۔ پہلا دوست: کل میں جنگل میں گیا تو میں نے تین شیر دیکھے۔ میں نے انہیں لائن میں کھڑا کیا اور گولی ماردی، وہ تینوں مرگئے۔

دوسرا دوست: کل میں جنگل میں گیا، وہاں دو شیر دیکھے۔ میں نے انہیں بندوق دکھائی اور وہ وہیں مرگئے۔

تیسرا دوست: کل میں نے جنگل میں ایک شیر دیکھا۔ میں نے کہا: تم جنگل کے بادشاہ ہونے کے باوجود ننگے پھر رہے ہو، وہ بیچارہ شرم سے ہی مرگیا۔

٭٭

کسی گاؤں میں بھیڑیا گھس آیا۔ سارے گاؤں میں بھگدڑ مچ گئی۔ ایک موٹی عورت اپنے خاوند سے بولی: آؤ ہم بھاگ چلیں کہیں؟ ہمیں بھیڑیا اٹھا کر نہ لے جائے۔

خاوند بولا: تم کیوں ڈرتی ہو، وہ بھیڑیا ہے، کوئی کرین تو نہیں۔

٭٭

ایک تھانے میں فون آیا کہ تھانے دار صاحب جلدی پہنچیں، چور میری گاڑی سے اسٹیرنگ، بریک اور ہارن وغیرہ نکال کر لے گیا ہے۔ تھانیدار ابھی جانے ہی والے تھے کہ اس شخص کا فون آیا کہ رہنے دیجیے تھانیدار صاحب ! میں دراصل بھول کر گاڑی کی پچھلی سیٹ پر بیٹھ گیا تھا۔

٭٭

ایک غیر ملکی مہمان نے اپنے میزبان سے پوچھا: کیا ائیر پورٹ یہاں سے قریب ہے؟

میزبان نے جواب دیا: ’’نہیں۔‘‘

مہمان نے وضاحت چاہی اور بولا: ’’پھر یہ ہوائی جہاز کی آواز کہا ںسے آرہی ہے؟

جواب ملا: یہ ہوائی جہاز نہیں شہر کے مچھر ہیں جو آپ کی آمد پر خوشی کا اظہار کررہے ہیں۔

٭٭

ٹیچر (بچے سے) بتاؤ ہم پانی کیوں پیتے ہیں؟

بچہ: مس! کیونکہ ہم پانی کھا نہیں سکتے۔

٭٭

ایک ڈاکٹر مریض کے پیچھے بھاگ رہا تھا۔ لوگوں نے پوچھا: کیا ہوا؟

ڈاکٹر: چار بارا یسا ہوا کہ دماغ کا آپریشن کرانے آتا ہے اور بال کٹوا کر بھاگ جاتا ہے۔

٭٭

ایک صاحب نے مسجد میں کھڑے ہوکر اعلان کیا:ایک صاحب نے ۲۴؍گھنٹے تک پانی میں سانس روکنے کا ریکارڈ قائم کیا ہے، جنہیں کل بعد نماز مغرب دفنایا جائے گا۔

٭٭

وکی اپنے دوست سے ملنے اس کے گھر گیا تو اس کے دوست کے ملازم نے کہا: صاحب تو گھر پر نہیں ہیں۔ وہ ضروری کام کے سلسلے میں باہر گئے ہوئے ہیں۔ آپ پھر کبھی آئیے گا۔

اتنے میں وکی نے کھڑکی سے اپنے دوست کا سر دیکھ لیا، اس نے ملازم سے کہا: اپنے صاحب سے میرا سلام کہنا اور یہ بھی کہنا کہ جب وہ گھر سے باہر جایا کریں تو اپنا سر کھڑکی میں چھوڑ کر نہ جایا کریں۔

٭٭

ایک سبزی فروش کے گھر بچہ پیدا ہوا تو پڑوسی اسے دیکھنے کے لیے آئے۔ ایک عورت نے پوچھا: ’’بھائی صاحب! بچہ کیسا ہے؟‘‘

سبزی فروش نے جواب دیا:’’بالکل تازہ ہے۔‘‘

٭٭

دو لوگ ایک جہاز میں بیٹھے تھے۔ ایک کہنے لگا: ’’وہ دیکھیں نیچے لوگ چیونٹیوں کے برابر نظر آرہے ہیں۔‘‘

دوسرے نے نیچے جھانک کر دیکھا اور بولا: ’’ابھی تو جہاز نے پرواز ہی نہیں کی، نیچے چیونٹیاں ہی پھر رہی ہیں۔

——

شیئر کیجیے
Default image
پیش کش: ادارہ

تبصرہ کیجیے