گلدستہ

فرمانِ رسولﷺ

— قیامت کے دن جن دو آدمیوں کا مقدمہ سب سے پہلے پیش ہوگا وہ دو پڑوسی ہوں گے۔ (مشکوٰۃ)

— اے مسلمان عورتو! کوئی پڑوسن اپنی پڑوسن کے ہدیے کو حقیر نہ سمجھے اگرچہ وہ بکری کی ایک کھری ہی کیوں نہ ہو۔ (بخاری و مسلم)

— جس شخص کو پسند ہو کہ اللہ اور اس کا رسولؐ اس سے محبت کریں تو اسے چاہیے کہ جب گفتگو کرے تو سچ بولے، امانت میں خیانت نہ کرے، اپنے پڑوسیوں کے ساتھ اچھا برتاؤ کرے۔ (مشکوٰۃ)

محمد شرف الدین۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔گواپوکھر

چھوٹی سی بات

— پرندے اپنے پاؤں کے باعث جال میں پھنستے ہیں انسان اپنی زبان کے باعث۔

— علم دل کو اس طرح زندہ کرتا ہے جیسے بارش زمین کو۔

— جو شخص کسی ظالم کو ظالم جانتے ہوئے اس کا ساتھ دے وہ اسلام سے نکل گیا۔

— کبیرہ گناہ یہ ہے کہ تم وہ بات کہو جو تم خود نہیں کرتے۔

اعظم اقبال۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔سیکری

کیا خوب ہیں

— وہ لمحات جو عبادتِ الٰہی میں گزریں۔

— وہ ہدایات جو سبق آموز ہوں۔

— وہ اعمال جو حقیقی دین پر مبنی ہوں۔

— وہ سنّاٹے جو خوفِ خدا سے جسم و جان پر چھا جائیں۔

— وہ ذہن جو آخرت سنوارنے میں مدد دے۔

— وہ انسان جو راہِ حق پر گامزن ہو۔

عرفانہ تسنیم جیلانی۔۔۔۔۔۔۔ ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔دربھنگہ

قیمتی موتی

— دنیا مومنوں کے لیے قید خانہ ہے اور کافروں کے لیے جنت۔

— جو آدمی نرمی سے محروم ہے وہ آدمی نیکی سے بھی محروم ہے۔

— جو آدمی وعدے کا پابند نہیں اس کا کوئی دین نہیں۔

— آرام ایک ایسا لفظ ہے جسے ناکارہ لوگوں نے کام سے بچنے کے لیے اختیار کیا ہے۔

راحت خاں ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔جبلپور

مہکتی باتیں

— محبت ایک کنول ہے جو دل کی سطح پر ایک بار کھلتا ہے۔ اور ایک بار ہی من کے آنگن میں اترتا ہے۔

— محبت اور عداوت کبھی پوشیدہ نہیں رہتی۔

— محبت کو جو ٹھکرا دے وہ گھر آئی دولت کو بھی ٹھکرا دے گا۔

— محبت ایک ایسا ساز ہے جو دلوں کی دھڑکنوں سے بجتا ہے۔

فرحت یاسمین۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ کلکتہ

پانی پینے کے اسلامی آداب

—سیدھے ہاتھ سے پانی کا برتن پکڑنا۔ —پانی پینے سے پہلے بسم اللہ الرحمن الرحیم پڑھنا۔— پانی بیٹھ کر پینا۔ — پانی دیکھ کر پینا۔ — پانی تین سانس میں پینا۔ —ہر بار پانی کے برتن سے منھ ہٹا کر سانس لینا۔ — پانی پینے کے بعد الحمد للہ کہنا۔نبی کریم ﷺ نے فرمایا ہے کہ کھڑے ہوکر ہرگز کوئی پانی نہ پئے اور اگر بھول کر ایسا کوئی کربیٹھے تو فوراً قے کردے۔

رئیس اختر۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ سہسرام

اقوال زریں

— نیکی حسن خلق کانام ہے اور گناہ وہ ہے جو تیرے دل میں خلش پیدا کرے اور تو اس امر کو برا سمجھے کہ لوگ اس سے واقف ہوجائیں گے۔ (محمدﷺ)

— حق بات کہو، اپنے دشمن کو معاف کردو، لیکن خدا کے دشمن کو نہ بخشو۔ (ابنِ تیمیہؒ)

— دنیا کی یاد عمل صالح کے لیے نیک شرط ہے۔ (حضرت ادریسؑ)

محمد فخر الدین ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔سنگھ بھوم

شیئر کیجیے
Default image
شرکاء

Leave a Reply