نعت

پل پل جو بجا لائے گا فرمانِ محمدؐ

ہوگا وہ نہ کیوں حشر میں مہمانِ محمدؐ

چلتے تھے رہِ حق پہ بلاتے تھے سبھی کو

روشن تھے ستاروں سے غلامانِ محمدؐ

انگلی کے اشارے سے قمر ٹکڑے ہوا ہے

کیا شان ہے، کیا شان ہے، کیا شانِ محمدؐ

اظہرؔ نہ کہے نعت یہ ممکن ہی نہیں ہے

حاصل ہے جو اعزازِ ثنا خوانِ محمدؐ

شیئر کیجیے
Default image
اظہرؔ کورٹلوی، کورٹلہ

Leave a Reply